گھی، دالیں، چاول، دودھ اور آلو سمیت 34 اشیا مہنگی ہو گئیں، تنخواہ دار طبقہ شدید متاثر

اسلام آباد: دالیں، گھی، چاول، خشک دودھ، دہی، گڑ اور آلو سمیت 34 اشیائے ضروریہ کی قیمتوں میں گزشتہ ایک ہفتے کے دوران اضافہ ہوا ہے جس کی وجہ سے تنخواہ دار طبقہ شدید متاثر ہوا ہے.یہ بات وفاقی ادارہ شماریات نے اپنی ہفتہ وار جائرہ رپورٹ میں بتائی ہے جس کے تحت مہنگائی کی شرح میں 2.89 فیصد اضافہ ہو گیا ہے۔جائزہ رپورٹ کے تحت ملک میں مہنگائی کی مجموعی شرح 38.42 فیصد تک پہنچ گئی ہے جب کہ صرف ایک ہفتے کے دوران 34 اشیائے ضروریہ کی قیمتیں بڑھ گئی ہیں۔ رپورٹ کے مطابق مہنگائی سے سب سے زیادہ 44 ہزار 175 روپے ماہانہ کمانے والا طبقہ متاثر ہوا ہے۔اعداد و شمار کے تحت 44 ہزار 175 روپے ماہانہ کمانے والوں کے لیے مہنگائی کی ہفتہ وار شرح 39.65 فیصد رہی ہے۔جائزہ رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ صرف ایک ہفتے کے دوران گھی کی فی کلو قیمت میں 44 روپے کا اضافہ ہوا ہے جس کے بعد ملک میں گھی کی فی کلو قیمت 592 روپے 25 پیسے تک پہنچ گئی ہے.رپورٹ کے مطابق دال ماش 8 روپے 26 پیسے مہنگی ہوئی ہے جس کے بعد اس کی اوسط قیمت 415 روپے 96 پیسے فی کلو ہوگئی جب کہ زندہ مرغی کی فی کلو قیمت میں 31 روپے 11 پیسے کا اضافہ ریکارڈ کیا گیا ہے۔ اس وقت زندہ مرغی کی اوسط قیمت 446 روپے 29 ہو گئی ہے۔وفاقی ادارہ شماریات کے مطابق ایک ہفتے کے دوران کیلے 12 روپے فی درجن مہنگے ہوئے، چاول کی فی کلو قیمت میں 4 روپے 50 پیسے کا اضافہ ہوا، 390 گرام خشک دودھ کی قیمت 11 روپے 40 پیسے بڑھ گئی، دہی کی فی کلو قیمت 2 روپے 85 پیسے اور دودھ 95 پیسے فی لیڑ مہنگا ہو گیا۔جائزہ رپورٹ کے تحت ایک ہفتے میں ایل پی جی کا گھریلو سلنڈر 46 روپے 98 پیسے فی کلو مہنگا ہوا جس کے بعد ایل پی جی کے گھریلو سلنڈر کی قیمت 3 ہزار 547 روپے سے تجاوز کر گئی۔ادارہ شماریات کے مطابق مٹن 12 روپے 14 پیسے ، بیف 5 روپے 13 پیسے مہنگا ہوا ہے جب کہ دال مونگ، چینی، گڑ اور آلو کی قیمتیں بھی بڑھ گئی ہیں.جائزہ رپورٹ کے مطابق گزشتہ ایک ہفتے کے دوران ٹماٹر 7 روپے 68 پیسے ، پیاز 30 روپے فی کلو، انڈے 12 روپے 30 پیسے فی درجن سستے ہوئے ہیں جب کہ لہسن اور آٹے کی قیمتوں میں بھی کمی ریکارڈ کی گئی ہے.

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *